March 3, 2018

سینٹ کی 11نشستوں پر انتخابات، خیبر پختونخوااسمبلی میں تیاریوں کوحتمی شکل دیدی گئی،کس کا پلڑا بھاری؟ کون کون امیدوار ہے،تفصیلات سامنے آگئیں

ISLAMABAD: As many as 133 candidates are in theThough the situation in Balochistan remains unpredictable, the PML-N is expected to have a clean sweep in Punjab by winning all 12 seats, including reserved seats for women, technocrats and minorities, due to its absolute majority in the provincial assembly. The PML-N has 310 MPAs in the 371-member Punjab Assembly, followed by 30 MPAs from the Pakistan Tehreek-i-Insaf (PTI).Similarly, the PML-N is all set to win the two seats from Islamabad — one general and one technocrat seat. Senator Mushahid Hussain Sayed, who had resigned as Senator last month will comfortably win the technocrat seat from Islamabad as a PML-N-backed independent candidate.At present the PML-N has 27 senators and nine of them are going to retire this month. The party is expected to win at least 15 seats and its total membership in the upper house may rise to 33. The PML-N with 16 lawmakers in the Khyber Pakhtunkhwa Assembly is expected to

اورعلی افضل جدون کے مابین مقابلہ ہوگا۔اسی طرح ٹیکنوکریٹ کی دونشستوں کے لئے مسلم لیگ ن کے دلاور خان، تحریک انصاف کے اعظم سواتی،جے یوآئی کے شیخ یعقوب اورآزادامیدوارمولاناسمیع الحق اور ڈاکٹرنثارخان کے مابین پنجہ آزمائی ہوگی۔ خواتین کی دونشستوں کے لئے سات امیدواروں کے درمیان مقابلہ ہوگا جن میں جے یوآئی کی نعیمہ کشور،پی ٹی آئی کی مہرتاج روغانی،اے این پی کی شگفتہ ملک،ن لیگ کی رئیسہ داؤداورثوبیہ شاہد، پیپلزپارٹی کی روبینہ خالد اورقومی وطن پارٹی کی انیسہ زیب طاہرخیلی شامل ہے۔خیبر پختونخوااسمبلی میں سینیٹ انتخابات کی تیاریوں کوحتمی شکل دیدی،پولنگ صبح نوبجے سے شام چاربجے تک جاری رہے گی۔ترجمان صوبائی الیکشن کمیشن کے مطابق سینٹ انتخابات کے حوالے سے تیاریوں کو حتمی شکل دے دی گئی۔پولنگ صبح 9 بجے شروع ہوکر جوشام 4 بجے تک جاری رہیگی۔صوبائی الیکشن کمشنر پیر مقبول احمد پریزائیڈنگ آفیسرجبکہ شہزاد احمد،خوشحال زادہ،ریاض احمد،سیدظہورشاہ،سہیل احمداورنویدالرحمان پولنگ آفیسرز کے طور پر ڈیوٹی سر انجام دیں گے۔ترجمان کے مطابق خیبرپختونخوا اسمبلی میں مجموعی طور پر 26امیدوار میدان میں ہیں۔جنرل نشستوں پر 13،ٹیکنوکریٹس پر 5 جبکہ خواتین کی نشستوں پر 8 امیدوار میدان میں ہیں جبکہ ن لیگ کے تمام امیدوار آزاد حیثیت میں حصہ لے رہے ہیں۔ خیبرپختونخوا سے گیارہ سینیٹرز منتخب ہونگے،گیارہ نشستوں میں سات جنرل،دوخواتین اوردوٹیکنوکریٹس منتخب ہونگے۔

Like Our Facebook Page

Latest News