February 22, 2018=National News

نوازشریف کی نااہلی پر نااہلی،ابھی تو کچھ بھی نہیں ہوا ،منصوبہ سازوں نے اصل منصوبہ بنایا کیا ہے؟جاوید ہاشمی نے ایسی کہانی سناڈالی کہ جس نے بھی سنی ’’پریشان‘‘ ہوگیا

ISLAMABAD: The star witness against the daughter and the son-in-law of former prime minister Nawaz Sharif in the Avenfield Apartments reference told the accountability court on Thursday that the Calibri font existed when the trust deed of the property was prepared.But the font was not commercially available before January 2007 and the trust deed was prepared in February 2006 hence it was fabricated, said forensic expert Robert M. Radley while testifying from the Pakistani High Commission in London via video link.Mr Radley had identified the use of Calibri font in the document of the trust deed of the property during the investigation carried out by the Joint Investigation Team in the Panama Papers case.During the seven-hour proceeding of the National Accountability Bureau (NAB)’s supplementary reference on Avenfield Apartments against the Sharif family, Mr Radley said that he was taking help from the notes he had prepared for today’s statement and cross-questioning.He admitted that he along with another witness, Akhtar Raja of the Quist Solicitors, had held a meeting with NAB Deputy Prosecutor General Sardar Muzaffar Abbasi, Director Investigation Amjad Nazir Olakh and another official on Wednesday and they had discussed the notes for today’s statement and cross-examination.Khawaja Haris, the counsel for Nawaz Sharif, during the course of cross-examination asked Mr

اور پی ٹی آئی کے کارکنان خوشی کے شادیانے بجارہے ہیں۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے ملتان پر یس کلب میں پریس کانفرنس کے دوران کیا مخدوم جاوید ہاشمی نے مزید کہا کہ میں کل کے فیصلے پر تبصرے کا حق رکھتا ہوں یہ میراآئینی و قانونی حق ہے عدلیہ کے وقار کو مٹی میں ملتے دیکھتاہوں لیکن اس کو تحفظ دینا عوام کا کام ہے میں نے اپنے آپ کو قربان کرکے جمہوریت کو بچایا جب میری نواز شریف سے ملاقات ہو ئی تو انہوں نے کہا کہ جیل جاؤں گا اگر مارا بھی گیا تو آئین کی جنگ ضرور لڑوں گا نواز شریف کے خلاف یہ فیصلہ آخر تک نہیں ہے بلکہ یہ لوگ میاں نواز شریف کو جیل میں ڈالیں گے سپریم کورٹ نے آئین کے خلاف ہی فیصلے دیئے ہیں ہم نے ججز کو پالا تنخواہیں اور مراعات اتنی دیں کہ جو انڈیا یا امریکہ کے ججز کو بھی حاصل نہیں ہے چیف جسٹس نے پی سی او کے تحت حلف اٹھایا ایک آدمی کو آئین میں ترمیم کا حق دے دیا جاتا ہے موجودہ ججز سے میں یہ سوال کروں گا عوام اس قسم کے فیصلوں سے تنگ آ چکے ہیں میں بار بار پوچھ رہا ہوں کہ آخر چیف جسٹس ثاقب نثار نے میرے ہاتھ کیوں چومے چیف آف آرمی سٹاف نے کمانڈرز نے مجھے سیلوٹ کیوں کیا افتخار چوہدری کے سامنے ضمانت کی درخواست دی مگر انہوں نے مسترد کر دی مگر بعد میں مجھے سیلوٹ کیا کل کے فیصلے نے جمہہوریت کے خلاف تباہی پھیر دی یہ کیسا فیصلہ ہے کہ جس شخص نے ایک لاکھ 26ہزار ووٹ لئے مگر سپریم کورٹ نے ایک منٹ میں اس کے خلاف فیصلہ دے دیادھرنا عمران خان کا نہیں تھا وہ تو بچہ جمہورا تھا جبکہ وہ جس کو چاہیں چڑھا دیتے ہیں اور قادری کو بھی سرپر چڑھا دیا تھا خادم حسین رضوی نے جو کچھ کہا ٹھیک ہی کہا جب تک جمہوریت کی دل سے عزت بحال نہیں ہو گی جنگ جاری رہے گی اور میں اعلان کرتا ہوں کہ میں جمہوریت کی جنگ میں نواز شریف کے ساتھ کھڑا ہوں میں نے مشرف کے خلاف جنگ کی مگر سپریم کورٹ نے مشرف کا ساتھ دیا جبکہ اقامہ کا کمزور فیصلہ دیا گیاانہوں نے کہا کہ الیکشن 2018میں ہی ہوں گے مگر انہوں نے سینیٹ الیکشن کا کیا حشر کر دیا امیدوار کو آج بھی پتہ نہیں کہ میں امیدوار ہوں یا نہیں۔ چیف آف آرمی سٹاف بدل گیا مگر مائنڈ سیٹ ہے جس میں وزیراعظم شکنجے میں ہوتا ہے اور ہم اس شکنجے کے خلاف جنگ لڑنا چاہتے ہیں عوام مل کر اس شکنجے کے خلاف جنگ لڑیں گے ایک انقلاب کا راستہ ہے اور دوسرا انتخاب کا بہتر راستہ انتخاب کا ہے انہوں نے کہا کہ عمران خان کو اسٹیبلشمنٹ نے سر پر چڑھا رکھا ہے جب تک ججز اور جرنیل آئین کی بالا دستی کو قبول نہیں کرتے ملک چل نہیں سکتا۔ انہوں نے کہا کہ میں نے اپنی زمینیں بیچ بیچ کر سیاست کی ۔

Like Our Facebook Page

Latest News